صفحات

جمعہ, نومبر 19, 2010

Sahib-e-hasiyat

شور آپ کے چشمے کا نمبر بڑھ گیا ہے، کیا"
"نہیں کیا ہوا ہے؟"
"کل کے پوسٹ میں آپ نے تحریر کیا تھا کہ ٹمپلیٹ میں آر۔ آر۔ ایس فیڈ کی کمی ہے۔ لیکن اِس میں تو آر۔ آر۔ ایس فیڈ موجود ہے۔"
"اچھا، لگتا ہے آج کل میرا دھیان کچھ بٹا ہوا ہے "
"کیا پریشانی ہے۔"
"میں یہ سوچ سوچ کر کچھ پریشان ہوں کہ عید قربان جو مسلمانوں کے لئے ایک خوشی کا دن تھا۔ اب دکھاؤے کا دن بن گیا ہے۔ بڑے بڑے صاحب حیثیت لوگ اپنے پیسے کی طاقت کا بھرپور طریقے سے دکھاؤا کرتے ہیں۔ عید کے موقع پر صرف یہ سننے کو ملتا ہے کہ کس نے کتنے ہزار کتنے لاکھ روپے میں قربانی کا جانور خریدا ہے۔ کس نے کتنے جانور قربان کئے۔ اپنے سب سے پیاری چیز کو اللہ تعالٰی کی راہ میں قربان کرنے کا جو واقع عید الضٰی کی وجہ بنا تھا اب وہ شاید ختم ہوتا جارہا ہے۔ دلوں کا حال تو اللہ پاک بہتر جانتے ہیں۔ لیکن اب عید قربان میں صرف یہ دکھائی دیتا ہے کہ کوئی کتنا صاحبِ حیثیت ہے۔"

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں